میاں بیوی کے جراثیم بھی ایک جیسے ہو جاتے ہیں، تحقیق آپ کے جیون ساتھی کا مزاج ہی نہیں بلکہ جراثیم بھی آپ پر اثرانداز ہوتے ہیں

ٹورانٹو:(وائس آف سوسائٹی نیوز) کہا جاتا ہے کہ طویل عرصے تک ایک ساتھ رہنے والے میاں بیوی کی شکلیں آپس میں ملنے لگتی ہیں لیکن اب کینیڈا کے ماہرین نے انکشاف کیا ہے کہ میاں بیوی کے جراثیم بھی ایک جیسے ہو جاتے ہیں۔یونیورسٹی آف واٹرلو، کینیڈا میں کی گئی اس تحقیق کے دوران 330 شادی شدہ رضاکاروں سے جسم کے 17 مختلف مقامات سے کھال کے نمونے حاصل کیے گئے جن کے تجزیئے سے معلوم ہوا کہ ایک ساتھ رہنے والے شادی شدہ افراد میں کھال پر موجود جرثوموں کے 80 فیصد نمونے اپنے جیون ساتھی جیسے تھے۔یہ تحقیق اس لحاظ ہے اہم ہے کیونکہ اب تک یہ سمجھا جاتا تھا کہ ہر انسان میں جرثوموں کا مجموعہ (مائیکروبایوم) دوسروں سے مختلف ہوتا ہے جو ساری عمر کم و بیش یکساں ہی رہتا ہے لیکن یہ انکشاف اس خیال کے بالکل خلاف ہے۔ریسرچ جرنل ’’ایم سسٹمز‘‘ میں شائع شدہ اس تحقیق کے نتائج سے جہاں یہ ثابت ہوا ہے کہ انسان میں موجود جراثیم کا مجموعہ طویل عرصے تک درپیش ماحول کے نتیجے میں تبدیل ہو جاتا ہے وہیں اس بات کی وضاحت بھی ہوتی ہے کہ برسوں تک ساتھ رہنے والے بعض شادی شدہ جوڑے ایک ہی جیسی بیماریوں کا شکار کیوں ہوتے ہیں

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *