کیا پاکستان میں عوام قربانی کے جانور ہیں۔اشرف بھٹی

ان بیچاروں کواشرافیہ کے مساوی انسانی حقوق کیوں نہیں دیے جاتے

لاہور.پاکستان پیپلزپارٹی پارلیمنٹرین کے مرکزی رہنما محمد اشرف بھٹی نے کہا ہے کہ کیا پاکستان میں عوام صرف قربانی کے جانور ہیں۔ان بیچاروں کواشرافیہ کے مساوی انسانی حقوق کیوں نہیں دیے جاتے۔پاکستان میں عام لوگ ٹیکس اوریوٹیلیٹی بلز اداکرتے ہیں جبکہ لٹا انہیں معاشی ثمرات سے محروم کردیاجاتا ہے۔ اشرافیہ نوازحکومت کب تک عام پاکستانیوں کی جیب پرہاتھ صاف کرے گی۔حکمران اپنے حامی سرمایہ داروں کوٹیکس نیٹ میں شامل کرنے میں بری طرح ناکام رہے ۔سرمایہ دارحکمران مہنگائی کاآدم خوربھوت بوتل میں بندکرنے کیلئے تیارنہیں کیونکہ ان کی نجی تجارت چمک اٹھی ہے جبکہ قومی معیشت کاکوئی پرسان حال نہیں۔ وہ فردوس پارک میں ایک اجتماع سے خطاب کررہے تھے ۔محمداشرف بھٹی نے مزید کہا کہ عدالت عظمیٰ نے بھی پاکستان میں بادشاہت پرمہرثبت کردی ۔حکمرانوں کاآمرانہ رویہ جمہوریت کیلئے خطرہ بن گیا ۔انہوں نے کہا کہ حکمران سیاسی شہادت کاخواب دیکھنا چھوڑدیں ،اس باران کاٹھکانا سرورپیلس نہیں بلکہ احتساب کا کٹہراہوگا۔ہماری قیادت کی بار بار نصیحت کے باوجودحکمران بھائی اداروں کے ساتھ تصادم سے بازنہیں آئے اورانہیں شامت کوآوازدی ۔انہوں نے کہا کہ اپنے گناہ چھپانے کیلئے دوسروں کامیڈیاٹرائل کرنا پاناما لیگ کاپراناوتیرہ ہے ۔حکمران ”ڈان ”بنے ہوئے ہیں ،انہیں دوسروں کی عزت اچھالنا بہت مہنگاپڑے گا۔انہوں نے کہا کہ پاکستان کاہرطبقہ شریف برادران کی بیڈگورننس کی دہائی دے رہا ہے ۔

Azam Ali
Media Cell

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *