مہاجروں سے ہمدردی ہے, ایم کیو ایم کی قیادت احمقانہ فیصلہ ہو گا,پرویز مشرف

دبئی (ویب ڈیسک ) آل پاکستان مسلم لیگ کے چیئرمین اورسابق صدر پرویز مشرف نے کہا ہے کہ ایم کیو ایم سے کوئی ہمدردی نہیں، اس کی سربراہی میرے لئے احمقانہ بات ہے ، اپنے آپ کو صرف مہاجر برادری کا لیڈر نہیں سمجھتا۔ ویڈیو پیغام میں انہوں متعلق افواہوں پر تبصرہ کرتے ہوئے کہا کہ ایم کیو ایم پاکستان اور پی ایس پی کا اتحاد غیر فطری مگر مہاجروں کے لئے اچھا تھا، یہ دونوں جماعتیں متحد ہو کر نئے نام کے ساتھ ہمارے اتحاد میں شامل ہو جائیں تو پیر پگارا اور دیگر سیاسی قوتوں کو ساتھ ملا کر پیپلزپارٹی کوشکست دی جا سکتی ہے ، جب کہ پنجاب میں پیپلزپارٹی اور (ن) لیگ کے فارورڈ بلاکس کو ساتھ ملایا جا سکتا ہے ، ایم کیو ایم سے کوئی ہمدردی نہیں، تاہم مہاجروں سے ہمدردی ہے ،ایم کیو ایم کی سربراہی کرنا میرے لئے احمقانہ بات ہے اور میں یہ کبھی نہیں کر سکتا،کراچی کی سیاست میں خواہ مخواہ میرا نام لیا جا رہا ہے ، اپنے آپ کوکسی علاقائی یا لسانی گروہ تک محدود نہیں کرسکتا،میری سوچ قومی سطح کی ہے ، جب کہ پی ایس پی نے پیشکش کی نہ ہی اس کی سربراہی کروں گا، اپنی سوچ کی وضاحت پہلے بھی کر چکا ہوں۔ انہوں نے کہا ہے کہ 23 جماعتی اتحاد قائم کیا ہے ، مزید لوگوں کو ساتھ ملا کر تیسری سیاسی قوت بنائی جا سکتی ہے

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *