شریفوں کی الٹی گنتی شروع،مقصد پانے کیلئے کشتیاں جلا دیتا ہوں، عمران خان

کرپٹ حکمرانوں نے ملک کابچہ بچہ مقروض کردیا،قوم غریب اوریہ ڈاکوامیرترہوگئے ،شریف بادشاہوں نے اسمبلی کے اندرباہرجھوٹ بولے ، اب کبھی اقتدارمیں نہیں آئینگے حکومت بناکرسب گندصاف،تمام ڈاکوجیل میں ڈال دینگے ،تحریک انصاف نہ بنتی توعوام انہی پرانے سیاستدانوں کی غلامی کررہے ہوتے ،میڈیاٹاک اورکانووکیشن سے خطاب
میانوالی،کندیاں(نامہ نگار وائس آف سوسائٹی نیوز)چیئرمین تحریک انصاف عمران خان نے کہاہے شریفوں کی بادشاہت کادھڑن تختہ اورالٹی گنتی شروع ہوچکی،مقصدپانے کیلئے میں کشتیاں جلادیتاہوں،کرپٹ ٹولہ عنقریب جیل کی سلاخوں کے پیچھے ہوگا۔تحصیل پپلاں میں ڈپٹی اپوزیشن لیڈرپنجاب اسمبلی سردار محمد سبطین خان سے انکی بھابی کی وفات پراظہارتعزیت کے بعدمیڈیاسے گفتگوکرتے ہوئے انکاکہناتھا شریفوں کی بادشاہت کا دھڑن تختہ ہونیوالاہے اور الٹی گنتی شروع ہوچکی،عدلیہ اورفوج کیخلا ف بیان بازی کرنیوالے ڈاکوؤں،لٹیروں کے احتساب کا وقت شروع ہوچکا، ان کرپٹ حکمرانوں نے ملک کا بچہ بچہ مقروض کردیا اورملک و قوم کا پیسہ لوٹ کر بیرون ملک اپنے بچوں کیلئے محلات، جائیدادیں اور کمپنیاں بنائیں،قوم کو غریب کردیااوریہ ڈاکو امیرسے امیر تر ہوگئے ،یہ سر سے لیکر پاؤں تک کرپشن میں دھنس چکے ،جھوٹ کی کوئی بنیاد نہیں ہوتی جبکہ شریفوں بادشاہوں نے اسمبلی کے اندرباہر جھوٹ بولے ،اب شریفوں کادور ختم ہوگیااوریہ دوبارہ کبھی بھی اقتدار میں نہیں آئینگے ،عنقریب یہ کرپٹ ٹولہ جیلوں کی سلاخوں کے پیچھے ہوگا،پی ٹی آئی اقتدارمیں آکرسب گندصاف کردیگی اور ان تمام ڈاکوؤں کو جیلوں میں ڈال دینگے ہماری 22سالوں کی طویل جد وجہد رنگ لائی اور اب پاکستانی عوام ان کرپٹ حکمرانوں کو کبھی بھی ووٹ نہیں دینگے ، آنیوالا دورپاکستان تحریک انصاف کاہی ہے جبکہ ہم چاروں صوبوں آزاد کشمیر اور گلگت بلتستان میں بھی حکومتیں بنا ئینگے ۔بعدازاں میانوالی میں نمل کالج کے سالانہ کانووکیشن سے خطاب کرتے ہوئے عمران خان نے کہا مشکل حالات میں سیاست چھوڑدیتا تو تحریک انصاف نہ بنتی اور پی ٹی آئی نہ بنتی توعوام ان ہی پرانے سیاستدانوں کی غلامی کر رہے ہوتے ، جب کوئی شخص نیا کام کرنا شروع کرتا ہے تو لوگ اسے پاگل کہتے ہیں،میرا بھی مذاق اڑایا گیا لیکن میں جس مقصد کے پیچھے جاتا ہوں تو اپنی کشتیاں جلا کر جاتا ہوں، جو ہار نہیں مانتے ان کو ہار ہرا نہیں سکتی ،پاکستان کا سب سے بڑا مسئلہ بیروزگاری ہے اوردنیا میں پیچھے رہ جانے کی و جہ سے ہم الجھن کاشکارہیں،جس جگہ ہوں اپنے ملک کو نہ بھولیں،ہمیں کہیں بھی اپنی شناخت نہیں بھولنی چاہئے کیونکہ گدھے کے اوپر لکیریں ڈالنے سے وہ زیبرا نہیں بن جاتا،نوجوانوں کو علامہ اقبال کے افکار کا مطالعہ کرنا چاہئے ، اپنی ذات کیلئے خواب دیکھنے والا بڑاآدمی نہیں ہوتا،اقتدارمیں آکرتعلیمی نظام بہترکرنے کیلئے خطیررقم خرچ کرینگے

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *